اوکاڑہ (بشکریہ محمد مظہررشید چوہدری )حج و عمرہ زائرین کے لیے فنگر پرنٹس کے فیصلہ کے خلاف ٹریول ایجنٹس کا احتجاجی مظاہرہ ،سعودی حکومت نے” اعتماد “کے نام سے لاہور ،کراچی ، اسلام آباد میں فنگر پرنٹس کے حصول کے لیے جو سنٹر قائم کیے ہیں اس سے حج و عمرہ کے لیے جانے والوں کی مشکلات میں اضافہ ہو گا ۔آدم علی جوئیہ،تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز ٹریولرز ایسوسی ایشن ضلع اوکاڑہ کے زیر اہتمام حج و عمرہ زائرین کے لیے فنگر پرنٹس کے فیصلہ کے خلاف ٹریول ایجنٹس نے پریس کلب کے سامنے بھر پور احتجاج کیا جس کی قیادت آدم علی جوئیہ،سعید عطاری، نثار آدم جوئیہ، چوہدری فقیر محمد، محبوب قادری،محمد ہمایوں، میاں صفدر، شکیل چشتی ،شیراز احمد ،محمد اسلم کر رہے تھے جس میں ضلع بھر سے سینکڑوں ٹریول ایجنٹس نے شرکت کی ۔آدم علی جوئیہ،نثار آدم جوئیہ،چوہدری فقیر محمد اور دیگر مقررین نے احتجاجی مظاہرہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب حکومت کی جانب سے حج و عمرہ پر جانے والے زائرین کے فنگر پرنٹس کو لازمی قرار دیے جانے سے پاکستان کے دوردراز علاقوں میں رہنے والوں کے لیے لاہور ،اسلام آباد ،کراچی میں قائم “اعتماد”سنٹر پر فنگر پرنٹس کے لیے جانا انتہائی مشکل عمل ہے انہوں نے کہا کہ جب سعودی حکومت اپنے ملک میں داخلہ کے وقت ایئرپورٹ پر سکینگ کے عمل سے ہر شخص کو گزارتی ہے تو پھرصرف پاکستانیوں کے لیے فنگر پرنٹس کا سلسلہ شروع کرنا ایک سوالیہ نشان ہے مظاہرین نے “گواعتمادگو” کے نعرے لگاتے ہوئے وزیر خارجہ ،وزیراعظم پاکستان ،چیف جسٹس آف پاکستان سے مطالبہ کیا ہے کہ سعودی عرب جانے والے زائرین کی مشکلات کا نوٹس لیتے ہوئے فوری کاروائی کریں اور سعودی حکومت سے فنگر پرنٹس کے لیے قائم سنٹر زکے خاتمہ کا مطالبہ کریں*