اوکاڑہ(بیورورپورٹ) پاکستان مسلم لیگ ن پنجاب کے رہنما منظور احمد سپرا ایڈووکیٹ نےManzoor Ahmed Sipra PML-N کہا ہے کہ سابق صوبائی وزیر ، پی پی کے سابق ضلعی صدر ،پی پی کے بروٹس ذاتی مفادات کی بار بار پارٹیاں بدلنے کے ماسٹر حالیہ صاف چلی شفاف چلی پی ٹی آئی کے رہنما اشرف خان سوہنا ہمارے قائد شہباز شریف کا نام وضو کرکے لیا کریں کیونکہ شہباز شریف ایک جذبے اور جنون کا نام ہے اور عوام کی خدمت میں ان کا کردار روز روشن کی طرح عیاں ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے مسلم لیگ ہاؤس اوکاڑہ میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کے دوران کیا۔ اس موقعہ پر مسلم لیگ ن کے رہنما غلام مصطفی صادق ، چوہدری محمد ریاض ایڈووکیٹس ، شہادت علی سپرا ، چوہدری عمران یونس مانی ، چوہدری فہیم احمد حنیف اور سہیل مغل بھی موجودتھے ۔ منظور سپرا نے کہا کہ جس پارٹی نے اشرف سوہنا اور صمصام علی شاہ کو وزیر بنایا اور پارٹی کے بہترین عہدوں سے نوازا جب پارٹی پر برا وقت آیا تو یہ بروٹس ذاتی مفادات کی خاطر اسے چھوڑ کر چلے گئے ۔ عنقریب جب پی ٹی آئی پر برا وقت آئیگا تو یہ اسے بھی چھوڑنے میں دیر نہیں لگائیں گے کیونکہ وفا ان کی گھٹی میں شامل ہی نہیں ہے ۔ اوکاڑہ کے باشعور عوام نے پہلے بھی انہیں یکسر مسترد کردیا تھا اور اب یہ بھیس بدل کر آئے ہیں دوبارہ بھی مسترد کردیئے جائیں گے۔ منظور سپرا نے دھرنے کی وجہ سے پارلیمنٹ میں نہ آنے ، تنخواہیں وصول کرنے اوراب واپس کرنے پرتبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ” نانی نے خصم کیا برا کیا۔ کرکے چھوڑ دیا اور بھی برا کیا ” سارے جہاں کے مسترد شدہ سیاستدانوں کے ہجوم کو اکھٹا کرکے ” نیا پاکستان” بنانے کے دن کی چکا چوند روشنی میں خواب دیکھے جارہے ہیں*