اوکاڑہ(بیورورپورٹ)فرقہ وارانہ اور مذہبی منافرت پھیلانے والوں سے آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا، ڈی پی او،شرانگیز تقریر کرنے والوں کے خلاف دہشت گردی ایکٹ کے تحت مقدمات درج ہو نگے ، ترجمان پولیس ڈسٹرکٹ پولیس آفیسرحسن اسد علوی نے کہا کہ ضلع اوکاڑہ میں امن وامان کی فضاء میں انتشار پھیلانے والوں سے آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائیگاتمام مسالک ہمارے لیے قابل احترام ہیں کسی بھی شخص کو مذہبی منافرت ،وال چاکنگ اور شرانگیز تقریروں کی کسی بھی قیمت پر اجازت نہیں دی جائے گی ڈی پی او اوکاڑہ حسن اسد علوی نے کہا کہ ضلع اوکاڑہ میں امن وامان قائم کرنے کے لیے اگر ہمیں آخری حد تک جاناپڑا تو ہم جائیں گے علماء کرام کو چاہیے کہ معاشرہ میں بھائی چارہ کی فضاء قائم کرنے کے لیے مسجد کے منبر سے لوگوں کو امن ومحبت کا پیغام دیں انہوں نے کہا کہ اوکاڑہ ضلع کے امن وامان اور مسلک ہم آہنگی کی مثالیں دوسرے اضلا ع دیتے ہیں شرانگیزتقریریں ہرگز برداشت نہیں کی جائیں گی اوکاڑہ کی عوام اور علماء کرام بھی اس بات کو ہرگز برداشت نہیں کریں گے کہ ضلع اوکاڑہ کا امن خراب ہو۔ضلعی امن کمیٹی اور انجمن تاجران نے واضح الفاظ میں کہا کہ ہم ضلعی انتظامیہ کے ساتھ کھڑے ہیں اور ہم کسی کو بھی ضلع اوکاڑہ کا امن خراب کرنے کی اجازت نہیں دیں گے *