اوکاڑہ(بیورورپورٹ)کوئٹہ اور پارا چنار میں بے گناہ پاکستانیوں کا قتل اور بیت اللہ پرحملہ کی ناپاک جسارت تمام مکاتب فکر کو مشترکہ طور پر جدوجہد کی دعوت دیتی ہے ان خیالات کا اظہار پاکستان علماء کونسل ضلع اوکاڑہ کے صدر صاحبزادہ شکیل الرحمن قاسمی نے یوم استحکام پاکستان سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا انتہا پسندی دہشت گردی اور فرقہ وارانہ تشدد کا مقابلہ باہمی اتحاد سے ہو سکتا ہے پاکستان کا آئین وقانون مسلم اور غیر مسلم کے حقوق کا محافظ ہے کسی گروہ یاجماعت کو یہ اختیار نہیں دیا جاسکتا کہ وہ نسل ومذہب کی بنیاد پر کسی کو اسکے حق سے محروم کرے صاحبزادہ شکیل الرحمن نے کہا کہ دہشتگردوں کا کوئی مذہب نہیں ،تمام مذاہب اور مسالک کے علماء کرام کو انتہا پسندانہ سوچ کے خلاف نظریاتی جدوجہد کرنا ہو گی اس موقع پر قاری عطا اللہ ،قاری محمد اشرف ،قاری عبدالطیف ،عمر چوہدری ،ڈاکٹر ریحان ،مولانا اسلم نے بھی خطاب کیا *