سرگودھا(سٹاف رپورٹر) نہر لوئر جہلم اور راجباہوں کے کناروں پر آبادقابضین سے کروڑوں روپے مالیت کی سرکاری اراضیاں واگزار کرانے کی کوششیں سیاسی مصلحت کا شکار ہو کر دم توڑ گئیں۔اس ضمن میں محکمہ انہار کے افسران نے دسمبر2012میں فہرستیں مرتب کر کے چیف انجینئر اور صوبائی حکام کو بھجوائیں مگر ان فہرستوں میں آنیوالے بڑے بڑے ناموں کے باعث دیگر کے خلاف بھی کاروائی کا آغاز نہ ہو سکا ۔نہر لوئر جہلم اور راجباہوں کے کناروں پر ساڑھے3ہزار سے زائد لوگ ناجائز قابض ہیں جنہوں نے پختہ تجاوزات تک تعمیر کر رکھی ہیں اورزیر تصرف جگہیں آگے کرایوں پر بھی دے رکھی ہیں ۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ صوبائی حکام توجہ دیکر قابضین کیخلاف کارروائی یقینی بنائیں ۔