TuQ1 copyاپوزیشن جماعتیں بد عنوان حکمرانوں کے خلاف ایک ہونے میں مزید دیر نہ کریں
امید ہے انصاف کے ایوانوں تک شہدائے ماڈل ٹاؤن کے ورثاء کی التجا پہنچ گئی ہو گی، اجلاس سے خطاب
ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کی سربراہ عوامی تحریک ڈاکٹر طاہر القادری سے انکی رہائش گاہ پر ملاقات

اسلام آباد(نامہ نگار خصوصی ) 17اگست 2017ء پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری نے سنٹرل ورکنگ کونسل کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ امید ہے انصاف کے ایوانوں تک شہدائے ماڈل ٹاؤن کے ورثا کی التجا پہنچ گئی ہو گی۔ملکی تاریخ میں پہلی بار انصاف کیلئے ہزاروں کی تعداد میں خواتین اور بچے باہر نکلے ۔حکومتی بربریت کا شکار یہ مظلوم صرف انصاف کے طالب ہیں۔نواز شریف کے پیچھے اصل طاقت شہباز شریف کا صوبائی اقتدار ہے۔شر کی دونوں قوتیں انجام کو پہنچیں گی تو ظلم پر مبنی نظام بدلے گا ۔قاتل برادران کو موقع مل گیا تو آئین سے امانت،صداقت کے الفاظ بھی حذف کر دینگے ، نیب کو بطور قومی ادارہ اپنی ساکھ بحال کرنے کا موقع ملا ہے تو وہ اس موقع ضائع نہ کرے۔قانون نے اپنا راستہ بنا لیا اب عوام اپنے حصے کا سیاسی کردار ادا کریں۔پاکستان ایماندار قیادت نے بنایا بدیانتوں نے تباہ کیا۔اپوزیشن جماعتیں اشرافیہ کے شر پر مبنی اقتدار کے مکمل خاتمے کے یک نکاتی ایجنڈے پر جمع ہونے میں دیر نہ کریں ورنہ بہت نقصان ہو گا ،پاکستان کو حقیقی جمہوریت کے راستے پر ڈالنے کیلئے قدرت نے ایک موقع دیا ہے۔ سنٹرل ورکنگ کونسل کے اجلاس میں چیئرمین سپریم کونسل ڈاکٹر حسن محی الدین،ڈاکٹر حسین محی الدین،سیکرٹری جنرل خرم نواز گنڈا پور،بر یگیڈئر (ر) اقبال احمد خان دیگر سینئر رہنماؤں نے اجلاس میں شرکت کی۔ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا کہ چھانگا مانگا کا جنگل ختم ہو گیا مگر اس جنگل میں پروان چڑھنے والی لوٹ مار،مک مکا اور خرید و فروخت کی سیاست اور اس کے بلڈرز اور انجینئرز ابھی باقی ہیں،اس لوٹ مار کی ذہنیت کا خاتمہ کرنا ہو گا ورنہ کرپشن روپ بدل بدل کر حملہ آور ہوتی رہے گی ۔سپریم کورٹ کے لارجر بنچ اور جے آئی ٹی کے ممبرز نے آئین و قانون کی سر بلندی کیلئے کام کیا جسے قوم نے سراہا۔اب نیب کو بطور قومی ادارہ اپنی ساکھ بحال کرنے کا موقع ملا ہے تو وہ اس موقع کو ضائع نہ کرے۔نیب حکام بد عنوانی کو جڑ سے ختم کرنے کے اس قومی ،آئینی،قانونی،عوامی ،اخلاقی ،جمہوری مشن کو ایمانداری کے ساتھ پورا کرنے کر کے پاکستان اور آئین سے اپنی محبت کا ثبوت دیں۔اگر اس موقع پر کسی ادارے نے کمزوری یا مصلحت سے کام لیا تو اس کی سزا آئندہ نسلیں بھی بھگتیں گی۔ڈاکٹر طاہر القادری نے کہا کہ عید الضحیٰ کے بعد فیصل آباد،ملتان میں احتجاجی ریلیاں اور دھرنے ہونگے اور انصاف مانگا جائے گا ۔ دریں اثناء پی ٹی آئی کی رہنما ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے ڈاکٹر طاہر القادری سے..انکی رہائش گاہ پر ملاقات کی اورشہدائے ماڈل ٹاؤن کے انصاف کے حصول کیلئے کامیاب احتجاج پر مبارکباد اوراس حوالے سے انکے موقف کی تائید کی اور انہوں نے کہا کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کے انصاف کیلئے جدوجہد کرنا ہر شہری پر لازم ہے۔ سربراہ عوامی تحریک ڈاکٹر طاہر القادری نے ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان اور انکی جماعت کی طرف سے شہدائے ماڈل ٹاؤن کے انصاف کیلئے کئے جانیوالے احتجاج میں بھر پور شرکت پر شکریہ ادا کیا ۔ ملاقات میں فیاض وڑائچ،مرکزی سیکرٹری اطلاعات نور اللہ صدیقی،سہیل رضا اور جواد حامد بھی موجود تھے ۔