اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ میں ججوں کی تقرری کے معاملے پرکشیدگی بڑھتی نظرآرہی ہے ۔ بادی النظرمیں جسٹس ریاض احمد خان ہی سینئرجج تھے۔ پارلیمانی کمیٹی میں جب معاملہ آیا توسنیارٹی کا معاملہ سامنے نہیں تھا۔ کمیٹی اس معاملے پردوبارہ غورکرے گی۔انہوں نے کہا کہ سینیارٹی کے معاملے پرجوڈیشل کمیشن کی تمام کارروائی کالعدم ہوجائے گی جوڈیشل کمیشن کی درست تشکیل پرغورہونا چاہئے ضروری ہے کہ جوڈیشل کمیشن ایسا ہوجس میں آئینی طورپرنامزدلوگ بیٹھیں۔