لالہ موسیٰ, پاکستان  پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنما سابق وفاقی وزیراطلاعات, سابق گورنر گلگت بلتستان اور پیپلزپارٹی کے سکرٹری اطلاعات چوہدری قمر زمان کائرہ کے تحریک انصا ف میں شامل ہونے کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے, قمرزمان کائرہ کے قریبی ذرائع کے مطابق کائرہ برادران پیپلزپارٹی پنجاب کے صدر کی ذمہ داری کے خواہاں ہیں, اس سلسلہ میں وہ پچھلے ڈیرھ سال   سے کوشش کر رہے ہیں, مگر پارٹی قیادت کی جانب سے ابھی تک حوصلہ افزا رپورٹ نہیں ملی, ناقدین گزشتہ بلدیاتی الیکشن مہم میں آصف علی زرداری کی تصیویر نہ لگانا اور اس کی رپورٹس میڈیا پر شایع کروا کر پارٹی قیادت  کو باور کروانا اسی سلسلے  کی کڑی بیان کیا جا تا ہے, گزشتہ دنوں اپنے میڈیا سیل سے پیپلزپارٹی پنجاب کے صدر چوہدری منظور وٹو سے منسوب بیان جاری کروانے کا الزام بھی لگایا جا تا ہے جس میں کہا گیا تھا کہ قمرزمان کائرہ کو پنجاب کی صدارت کیلئے رضا مند کیا جائے, جبکہ پیپلزپارٹی پنجاب کے بڑے گھرانے اس کی مخالفت میں کھڑے ہیں, پارٹی کے معتبر اور نامور گھرانوں میں کوئی بھی کائرہ خاندان  کی حمایت میں نہیں .جبکہ دوسری جانب قمرزمان کائرہ کی تحریک انصاف کی مرکزی قیادت سے ملاقاتوں اور پارٹی میں مخالفت کی بنیاد پر تحریک انصاف میں شمولیت کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے, ذرائع دعویٰ کیا ہے کہ اگر قمرزمان کائرہ کو پنجاب کی صدارت نہ دی گئی تو وہ تحریک انصاف میں شامل ہو جائیں گے,