پاکستانی نژاد اٹلی پلٹ 26سالہ ثناء چیمہ کی موت کا  FB_IMG_1524486799237


نیا پہلو سامنے آ گیا
گزشتہ دِنوں گجرات کے علاقہ موضع منگوال میں اٹلی سے آئی خاتون کی موت کو اطالوی میڈیا نے قتل کا رنگ دیکر پاکستانی کمیونٹی کے خلاف 4 روز تک خوب زہر اگلا۔ جس کے رد عمل میں اٹلی میں موجود پاکستانی کمیونٹی نے بھی احتجاج ریکارڈ کروایا اور اصل حقائق آنے تک کسی قسم کی منفی رائے قائم کرنے کی تردید کی۔
سوشل میڈیا پر خبریں وائرل ہوئی تو گجرات پولیس بھی حرکت میں آ گئی ۔
اہل خانہ کی جانب سے کوئی مدعی نہ بنا تو وقوعہ کے چار روز بعد  ایس ایچ او تھانہ کنجاہ نے اپنی مدعیت میں متوفیہ کے باپ غلام مصطفیٰ، بھائی عدنان مصطفیٰ اور چچا مظہر اقبال پر زیر دفعہ 302کے تحت مقدمہ درج کردیا۔
ذرائع کیمطابق ثناء چیمہ بلڈ پریشر اور معدہ کی مریضہ تھی جس کا علاج سرجیکل ہسپتال سے کروا جا رہا تھا ۔ اچانک طبیعت دوبارہ بگڑنے پر ہسپتال لے جاتےہوئے راستہ میں دم توڑ گئیں
گھر والوں نے شرعی طریقے سے تدفین کی جبکہ پولیس کے مطابق ثناءچیمہ اٹلی میں خاندان سے باہر شادی کرنےکی خواہشمند تھی جس پر اسے قتل کردیا گیا۔
مزید تحقیقات کیلئےسول جج لبنی صغیر کی نگرانی میں صبح 10 بجےمتوفیہ کی قبر کشائی کی جائے